تارہ ترین

سپریم جوڈیشل کونسل نے جسٹس مظاہر کو مس کنڈکٹ کا مرتکب قرار دیدیا

0

سپریم جوڈیشل کونسل نے جسٹس مظاہر نقوی کو مس کنڈکٹ کا مرتکب قرار دیتے ہوئے انہیں برطرف کرنے کی سفارش کردی

سپریم جوڈیشل کونسل نے اپنی رائے منظوری کےلیے صدر مملکت کو بھجوا دی۔

سپریم جوڈیشل کونسل کے اعلامیہ میں کہا گیا ہے کہ کونسل نے ججز کوڈ آف کنڈکٹ کی شق نمبر 5 میں ترمیم کردی۔

اعلامیہ کے مطابق سپریم کورٹ اور ہائیکورٹ کے ججز پر الزامات لگا کر انکی تشہیر کی گئی، کئی ججز نے اپنے اوپر لگائے گئے الزامات پر تشویش کا اظہار کیا۔

اعلامیہ میں مزید کہا گیا ہے کہ ججز کا مؤقف ہے بےبنیاد الزامات پر جواب سے ججز کوڈ آف کنڈکٹ کی شق 5 کی خلاف ورزی ہوگی۔

یہ بھی پڑھیں  سابق گورنر سندھ محمد زبیر نے مسلم لیگ ن چھوڑ دی

اعلامیہ کے مطابق کونسل مشاورت کے بعد اس نتیجے پر پہنچی کہ بےبنیاد الزامات کا جواب دینے سے شق 5 کی خلاف ورزی نہیں ہوتی۔ ججوں کی تشویش کے باعث ججز کوڈ آف کنڈکٹ کی شق 5 میں ترمیم کی گئی۔

کونسل کے اعلامیہ کے مطابق سپریم جوڈیشل کونسل نےججز کے خلاف 6 مختلف شکایات کا جائزہ لیا، 6 میں سے 5 شکایات میں ایسا کوئی مواد نہیں تھا جس پر کونسل کارروائی کرے، بلوچستان ہائیکورٹ کےایک جج کےخلاف شکایت پرجج کو نوٹس جاری کیا جاتا ہے، بلوچستان ہائیکورٹ کےجج نوٹس کا جواب 14 دن میں سپریم جوڈیشل کونسل کو بھجوائیں۔

اعلامیہ میں مزید کہا گیا ہے کہ سپریم جوڈیشل کونسل نے مظاہر نقوی کے خلاف 9 شکایات کا جائزہ لیا، ان شکایات کا جائزہ آئین کے آرٹیکل 206 کی شق (6) کے تحت لیا گیا، مظاہر نقوی ان شکایات میں مس کنڈکٹ کے مرتکب پائےگئے، انہیں جج کے عہدے سے ہٹا دیا جانا چاہیے تھا۔

Leave A Reply

Your email address will not be published.