تارہ ترین

22 سالہ ماڈل سدرہ خالد کو اس کے بھائی حمزہ نے اس وقت غیرت کے نام پر قتل کردیا جب وہ اپنے اہلخانہ کے ہمراہ عید منانے اوکاڑہ پہنچی تھی۔

ملزم حمزہ کا کہنا ہے کہ میں نے اکیلے سدرہ کو فائرمار کے قتل کیا اس میں اور کوئی ملوث نہیں ہے۔ بہن سدرہ کو قتل کرنے پر مجھے کوئی شرمندگی نہیں ہے میں نے وہی کیا جو ایک بھائی کو غیرت کے نام پر کرنا چاہیے تھا۔

0
یہ بھی پڑھیں  سپریم کورٹ لاہور رجسٹری کی تاریخی عمارت میں دراڑیں پڑ گئیں، فوری مرمت کا حکم
Leave A Reply

Your email address will not be published.